Original Articles

Hats off to Prime Minister Gilani – by PPP UK


Those who were hoping that PM Gilani will undermine the President of Pakistan / Co-Chairman PPP Asif Ali Zardari, this is a message to you to shut your mouth and keep playing games if you want to but this time we won’t let you create another Farooq Leghari witin the PPP’s ranks.

We the Critical Supporters of Pakistan Peoples Party are with our Co-Chairman/President Asif Ali Zardari and PM Gllani and there is no one in this World who can make differences between our Party Leadership, we are united and by the blessings of Allah, we are the most powerful and strongest party in Pakistan. PPP will ever remain on the ideology and vision of Bhuttoism and no one will finish this ideology which runs from Garhi Khuda Bakhsh. Long Live PPP, Long Live Bhuttoism, Long Live Zardari, Long Live Awaam, Long Live Pakistan.

مدعی لاکھ برا چاھے تو کیا ھو تا ھے وھی ھوتا ھے جو منظورخدا ھو تا ھے

کیا خوب طریقے سے سازشیوں کے غبارے سے حوا نکال دی۔ وزیرآعظم پاکستا ن ہوسف رضا گیلانی نے عوامی اور جمھوری صدر آصف علی زرداری کے نقش قدم پر چلتے ہوے عوامی، جمھوری اور تاریخی فیصلہ کرتے ہوے اداروں کو بھت بڑے تصادم سے بچالیا۔ اب تو اپوزیشن کے پاس کوئی جواز نہیں رھا کیونکہ اپوزیشن سمجتی تھی کہ پی پی پی انکی طرح عدالت پر حملہ کرے گی ہا ججوں کو گرفتار کیا جا ئگا ہا کچھ لے دے ھو گا اور جو بھی اپوزیشن کی منفی سوچ ھے لیکن آصف علی زردای نے حکومت کی انا کا مسلہ نہیں بناہا اور اہک دفعہ پھر پاکستان کھپے کا نعرہ لگاہا۔ اب تو اپوزہشن کی وہ بات ھو گئ ھکہکھسیا نی بلی کھمبا نو چے کیونکہ اب تو ہہ آینی قائمہ کمیٹی سے بھی بھاگ گئے ھیں۔ جموری اور عوامی حکومت تو صرف اور صرف عوام کی خواحشات کا احترام کرتی اور ہہ خاصا تو صرف اور صرف پاکستان پیپلز پارٹی کا ھی ھے۔

About the author

Farhad Jarral

3 Comments

Click here to post a comment
  • In addition to the above view by the PPP, UK, there are at least three further views on the latest development, which are provided below, courtesy pkpolitics:

    nota said:
    “PM & CJ Meeting Bring Results”:
    1. CJ looses respect of lawyers and gets accused (rightfully) of “کچھ لو کچھ دو”
    2. Gilani and Zardari get to claim “we upheld the constitution” after tearing it up…
    3. Corrupt government continues

    time said:
    @nota

    I can understand sitting in Mansoora your dream was to see end of PPP gov or atleast Zardari through this crisis. It didn’t happen and now you are blaming any one and every one. Let me remind you even if PPP is out Nawaz Sharif will come in power that I understand may be a lesser eveil for you.

    Even if whole village dies Imran Khan/Munawar Hassan can never become chaudhry so chill out bro.

    Faarigh Jazbati said:
    السلام و علیکم
    آج پاکستان کی سیاسی تاریخ کا سیاہ دن ہے . ہیت مقتدرہ نے آج پھر عوام اور عوامی طاقت کو شکست دے دی ہے . ہیت مقتدرہ نے یہ جان کر کے کہ عوام اب کبھی بھی فوجی آمریت کو قبول نہیں کریں گے ملک پر عدالتی آمریت مسلط کر دی ہے. یہ پاکستان میں ہیت مقتدرہ کا ترکی کا حکومتی ماڈل ہے جس میں کسی بھی سیاسی حکومت کو اب آئینی طور پر قتل کیا جاۓ گا اور اس پر کسی کو رونے کی بھی اجازت نہیں ہو گی.
    اب بات عدلیہ کی آزادی سے آگے بڑھ چکی ہے اور عدلیہ کی آزادی کا میلہ عوامی طاقت کا کمبل چرانے کیلئے لگایا گیا تھا . افسوس اور شرم کی بات یہ ہے کے اس سارے فساد اور خرابی کی وجہ ایک عوامی حکومت ہے اور اس نے اپنی حرکتوں سے ہیت مقتدرہ کو یہ سب کرنے کا جواز مہیا کیا ہے

  • The presdient and the prime minister have fully exposed this CJ guy. So it turns out that supremacy of constitution and strengthening of institutions mean one thing, a one year extension for his buddy. But this will embolden the estalishment thugs and I think PPP should continue with show of political strength and one again go ahead with full force the drive for membership among the masses.

  • وکیل رہنما حامد خان نے بھی چیف جسٹس اور وزیر اعظم کی ملاقات پر تحفظات کا اظہار کیا اور کہا کہ وکلاء برادری اس حق میں نہیں ہے کہ عدالتی سربراہ اور ملک کی انتظامی مشینری کے سربراہ کے درمیان ملاقاتیں ہوں۔انہوں نے اس اُمید کا اظہار کیا کہ آئندہ چیف جسٹس وزیر اعظم یا کسی بھی حکومتی اہلکار سے ملاقات کرنے سے اجتناب کریں گے۔

    http://www.bbc.co.uk/urdu/pakistan/2010/02/100218_judges_issue_mah.shtml