Original Articles

ہزارہ برادری سے اظہار یکجہتی کیلئے باغ آزاد کشمیر میں احتجاجی مظاہرہ

آزاد کشمیر کے شہر باغ میں ہزارہ شیعہ مسلمانوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے مظاہرہ کیا گیا۔

مظاہرے میں سینکڑوں افراد ہاتھوں میں پلے کارڈ اور بینر لئے سڑکوں پر نکل آئے

مظاہرین نے زمان چوک میں دھرنہ دے دیا

مظاہرین کی نعرے بازی وزیر اعظم پاکستان عمران خان سے فورن کوئٹہ جانے کا مطالبہ کیا

مظاہرین کا کہنا تھا کہ ہزارہ برادری کی نسل کشی کو فورن بن کیا جائے۔ ہزارہ برادری کے ساتھ یہ پہلا واقعہ نہیں آج تک کسی کو گرفتار نہیں کیا گیا – دہشتگردوں کو کھلی چھٹی دی گئی ہے جو مرضی آئے وہ کریں۔ مظاہرین  ہزارہ برداری کے ساتھ ظلم کربلا کی یاد دلاتا ہے

معصوم اور بے گناہ لوگوں کے گلے کاٹے جا رہے ہیں اور حکومت بے بس نظر آ رہی ہے۔ اگر وزیر اعظم کا وہاں جانا سیکورٹی رسک ہے تو وہاں عام عوام کیسے اپنی زندگی جی رہے ہوں گے۔

دوسری جانب مقبوضہ کشمیر کے علاقے کارگل میں بھی عوام کی بڑی تعداد نے ہزارہ شیعہ مسلمانوں سے اظہار یکجہتی کے لیے مظاہرہ کیا اور حکومت پاکستان سے قاتلوں کی گرفتاری کا مطالبہ دہرایا۔