Original Articles Urdu Articles

ڈاکٹر نمرتا کے قتل بھرپور مذمت کرتے ہیں – اوورسیززپاکستانی گلوبل فاءونڈیشن

اقلیتوں کو نقصان پہچانے کی اسلام اجازت نہیں دیتا ، چیئرمین ظہیر اختر مہر

(نیویارک) اوورسیزز پاکستانی گلوبل فاءونڈیشن کے چیئرمین نے پاکستان کی ہندءو برادری سے اظہار یکجہتی کرتے ہوئے کہا کہا کہ ہم گھوٹکی مندر کی تھوڑپھوڑ کی بھر پور مذمت کرتے ہیں اور حکومت سے وقت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ پاکستان کے صوبہ سندھ میں آباد ہندءو برادری کے مذہبی عبادت گاہ نقصان پہچانے والے انتہا پسندو ں کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے تاکہ انہیں کڑی سزا دی جائے ۔ چیئرمین ظہیر اختر مہر نے مزید کہا کہ پاکستان میں تمام مذاہب کے لوگوں کو برابر ی کے حقوق حاصل ہونے چاہیے اور غیر مسلم پاکستانی بھی ملک کی ترقی کے لیے اپنا اہم کردار ادا کر رہے ہیں ۔ اس کے علاوہ اوورسیززپاکستانی گلوبل فاءونڈیشن کے چئیرمین نے لاڑکانہ سے تعلق رکھنے والی ہندءو ڈاکٹر طالب علم ڈاکٹر نمرتا قتل کی بھر پور مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ہمار ا حکومت وقت سے یہ مطالبہ ہے کہ وہ جوڈیشنل کمیشن کی تحقیقات کو شفاف اور غیرجانبدار انہ طور پر کریں تاکہ اس کے ذریعے ڈاکٹر نمرتا کے قتل کے اصل قاتلوں تک پہنچا جاسکے اور انہیں سزا دیکر مقتول کے لواحقین کو انصاف دلایا جاسکے ۔

اس موقع پر فاءونڈیشن کے پریس سیکٹرئر ی وجیش پرتاب نے کہا کہ پاکستان میں ہندءو اور دیگر اقلیتی برادریوں کے حقوق اور انہیں محفوظ بنانے کے لیے قانون سازی کی بہت ضروری ہے کیونکہ رواں سال ہندءو برادری میں جبری مذہب کی تبدیلی کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے اور اس پر حکومت وقت قدرِبہتر اقدامات نہیں کیے ۔ اس لیے وفاقی اور صوبائی حکومتوں کو یہ چاہیے کہ ملک روادری کے پرچار مزید عام کریں تاکہ عوام میں سماجی برداشت پیدا ہوسکے، جو کہ بنیادی انسانی حقوق کا اہم پہلوں ہے ۔