Original Articles

ادارہ تعمیر پاکستان وزیراعظم پاکستان عمران خان کی جانب سے وزرات داخلہ کا شیعہ برادری کے خلاف تعصب آمیز نوٹیفیکشن پہ نوٹس لینے اور سخت ایکشن کی یقین دہانی کرانے کے عمل کو مثبت اقدام قرار دیتا ہے

ادارہ تعمیر پاکستان وزیراعظم پاکستان عمران خان کی جانب سے وزرات داخلہ کا شیعہ برادری کے خلاف امتیازی و تعصب آمیز نوٹیفیکشن پہ نوٹس لینے اور سخت ایکشن کی یقین دہانی کرانے کے عمل کو مثبت اقدام قرار دیتا ہے۔ ہم امید رکھتے ہیں کہ جن افراد کے خلاف سعودی عرب کے ولی عہد محمد بن سلمان یا حکومت کی پالیسیوں پہ تنقید کرنے پہ مقدمات درج ہوئے۔وہ خارج کردیے جائیں گے اور گرفتار ہونے والوں کو رہا کردیا جائے گا۔ ہم حکومت سے یہ بھی امید کرتے ہیں کہ وہ حکومت سے اختلاف کرنے والے سوشل میڈیا ایکٹوسٹ کے خلاف کریک ڈاءون کا فیصلہ واپس لے گی۔


مذھبی منافرت یا نسلی منافرت پھیلانے والوں کے خلاف یکساں اور غیرامتیازی کاروائی کی کوئی مخالفت نہیں کرتا لیکن اس آڑ میں کسی ملک میں ہونے والی انسانی حقوق کی پامالی کی نشاندہی کو بھی مذھبی منافرت قرار دیا جائے یہ ظالمانہ اور ناقابل قبول اقدام ہے۔ایسے اقدامات سے حکومت کی نیک نامی میں اضافہ نہیں ہوگا۔