Original Articles Urdu Articles

دیوبندیوں کی جانب سے شیعہ قتل عام پر کسی ملحد کا فرقہ وارانہ کہہ کر جسٹیفائی کرنا بھی ڈرون ردعمل جیسا جماعتی موقف ہے — زالان

zal

پاکستان میں شیعہ، ہندو ،قادیانی ،عیسائی آپس میں نہیں لڑتے ہیں انکا بھی تو مذہبی اختلاف ہے صرف دیوبندی وہابی تشدد پسند کیوں ؟

دیوبندیوں کی جانب سے شیعہ قتل عام پر کسی ملحد کا فرقہ وارانہ کہہ کر جسٹیفائی کرنا بھی ڈرون ردعمل جیسا جماعتی موقف ہے

طالبان شیعوں پر حملہ کریں تو فرقہ وارانہ مذہبی ختلاف کا جواز دینے والے طالبان کے ہمدرد ہیں ایسا ہی ہے کہ اگر ہمارا فوج سے سیاسی اختلاف ہے تو ان پر طالبان حملہ کریں تو ہم اپنی مخالفت اور غصہ نکالنے کے لئے طالبان کے حملوں کی جسٹیفیکیشن دیں

جب اسلام کے مظالم کی بات کرو تو باقی مذھب کے ظلم کی بات کرو ،جب وہابی دیوبندی دہشتگردی کی بات کرو تو شیعہ اور قادیانی کی بحث لے آ و ، یہ سب طالبان کی حمایت کرنے والی باتیں ہیں ، اگر کوئی خونخار بھیڑیا لوگوں کو کھا رہا ہے تو اس کے جواب میں یہ کہو کہ پکرا بھی تو سینگ مارتا ہے بھیڑیے نے کہا لیا تو کیا ہوا

مسلہ یہ ہے کہ ملک میں اس وقت یکطرفہ دیوبندیوں کی جانب سے شیعوں کا قتل عام جاری ہے اسکی وجہ چودہ سو سال سے جاری شیعہ سنی جنگ نہیں  بلکہ طالبان کی جانب سے جنگ اور قتل عام ہے ، ہر دہشتگردی کے بعد یہ کہنا کہ یہ شیعہ سنی فساد ہے طالبان اور انکی سوچ کو مزید مظبوط کر دیتا ہے

شیعوں کو قتل کا بنیادی مقصد شیعہ سنی کا فساد پیدا کرنا ہے ، دیوبندیوں کی ہر دہشتگردی کے بعد یہ شور مچایا جاتا ہے کہ اگر توھین ختم ہو جائے تو یہ قتل عام بھی ختم ہو جائے گا ، اس ساری سوچ اور بحث کا فائدہ طالبان اجنڈے کو ہی پہنچ رہا ہے ، ملحدین جو شیعہ مذہب کو بھی اسی طرح غلط کہتے ہیں جس طرح اور دوسرے مذاہب ہیں مگر آج کل کی شیعوں کی ٹارگٹ کلنگ کو میں فرقہ وارانہ نہیں کہہ سکتا ، یہ صرف اور صرف دیوبندی ایجنڈا ہے

میرا نہیں خیال کے ایک فیصد شیعہ بھی پاکستان میں اپنی مذہبی حکومت قائم کرنا چاہتے ہیں یا کسی مسلح جنگ کا ارادہ رکھتے ہیں ، جو کچھ رد عمل شیعوں کا ہے وہ دیوبندی دہشتگردی کی وجہ سے ہے اور وہ بھی بہت تھوڑا سا ، طالبان اور دیوبندی کامیاب ہونگے اگر ہم اس دہشتگردی کو فرقہ وارانہ دوطرفہ لڑائی کہیں گے

اگر پاکستان میں دیوبندی اور طالبان جماعتیں دہشتگردی نا کریں تو شیوں سے کوئی فرقہ وارانہ لڑائی نہیں ہو رہی ، رہی بات چھوٹی موتی بدمعاشیوں کی تو ہم اس کا مقابلہ دہشتگردی سے نہیں کر سکتے ہیں ، پاکستان کے بہت سے شیعہ مذہبی طور پر ایران کے ساتھ ضرور ہونگے مگر یہ ریاست کے لیے کوئی خطرہ نہیں اور نا ہی شیعہ پاکستان پر مذہبی قبضے کا سوچتے ہونگے

میں نے کب کہا کہ ایران میں مذہبی جبر نہیں ، مگر یہ دیوبندی دہشتگردی کا مقصد ہی یہی ہے کہ ملک کو مذہبی بنیاد پر تقسیم کیا جائے ، دیوبندی مذہبی جماتیں سنی نمائندہ بن جائیں ، اور ملک میں انکی حمایت بڑھ جائے ، اسے لئے یہ دہشگردی کی جا رہی ہے ، ہر خودکش دھماکے کے بعد شیعہ دونی مسائل ،توھین صحابہ اور ایران کے انقلاب جو لا کر خودکش دھماکوں اور دہشتگردی کے جوازات دینا اصل میں طالبانی ایجنڈے کا ساتھ دینا ہے

ایرانی انقلاب کے بعد یہ ضرور ہوا تھا کہ شیعہ پاکستان میں بھی متحرک ہوے تھے مگر ان کا اثر ختم ہو چکا آج اگر شیعہ تنظیمیں ہیں بھی تو اوہ پاکستان میں کسی شریعت کے خواب نہیں دیکھ رہی ہیں

جو ملحد یہ کہتا ہے کہ سپاہ صحابہ کا بننا شیعہ تبرہ کی وجہ سے تھا اگر تبرہ نا کرتے تو ایسا نا ہوتا ، تو اسکا مطلب ہے تو اظہار راے کی آزادی کے تصور سے متفق نہیں

ایرانی انقلاب کو تیس سال ہو گئے ہیں اب پاکستان میں ایک فیصد شیعہ بھی شیعہ حکومت نہیں لانا چاہتے ہیں

نوے فیصد مذہبی جنونی سنی ملک میں شیعہ سنیوں کا قتل عام کریں گے؟

جماعت اسلامی پچھلےساتھ سال سے پاکستان کو مذہبی زنی ریاست بنا چکی ہے ، تحریک جعفریہ محض کاغذی جماعت ہے

سپاہ صحبہ سنی مسلک کافی حد تک پاکستان میں رائج ہے اگلا قدم پاکستان میں طالبان جیسی حکومت کا ہے ، اس کے لئے سوات ،لال مسجد وغیرہ کے ذریے یا پھر تمام سیاسی جماعتوں کو ختم کر کے ریاست پر قبضہ کرنے کے لئے ہی دہشتگردی ہو رہی ہے ، آج ملک میں یہ سب دہسہتگردی دیوبندیوں کی جانب سے ریاست پر قبضے ہی کے لئے ہیں ، اور شیعوں کا قتل لوگوں کو مذہب کی بنیاد پر تقسیم کر کے اپنے آپ کو سنیوں کا خیر خواہ بنانے کے لئے ہے

15

11

12

13

14

16

bbb

ll

11

12

13

14

15

16

17

18

19

20

21

22

—————————–

Ayaz Nizami
اگر قرقہ وارانہ Labeling کو ملحوظ خاطر رکھا جائے تو پاکستان میں وزیرستان میں جاری دہشت گردی کی وجہ سے سب سے زیادہ متاثر بھی دیوبندی طبقہ ہوا ہے۔ اگر کوئی شیعہ تنظیم پاکستان میں شیعوں کے خلاف جاری دہشت گردی کو دیوبندی دہشت گردی قرار دے تو مجھے اس لیبل سے قطعا کوئی اختلاف نہ ہوگا لیکن اگر خود کو سیکولر اور لبرل کہنے والا اگر اس دہشت گردی پر دیوبندی دہشت گردی کا لیبل لگائے گا یہ سیکولرازم اور لبرل ازم نہیں ہے، بلکہ اپنے اندر کے فرقہ واریت کے جذبے کو سیکولرازم اور لبرل ازم کے نام پرتسکین فراہم کرنا ہے۔

Insan Al Haq
یہ یقینا
*LUBP*
کے نفسیاتی مریضوں کا کام ہے
شیعہ بهی کم جانور نہیں ہوتے، اپنی مظلومیت کا رونا روتے مگر جس خبیث خامنہ ای کے قصیدے پڑهتے نہیں تهکتے خود اس نے ایرانی بہائیوں کے ساته کیسا برا سلوک کیا اور انکا جینا حرام کر رکها ہے.
13 hrs · Like · 1

Salman Ali
انسان &خان بھیا مفروضوں پر اپنے دل کی بڑاس نہ نکالو ، ایران اپنے شہریوں کے ساتھ کیا کرتا ہے وہ جانیں ان کے شہری ان کی تو حکومت اپنی مرضی کا انصاف کرتی ہے اچھا یا برا عام شہری تو محفوظ ہیں وہ تو ایک دوسرے کے گلے نہیں کاٹتے کبھی سنا ایران میں کسی شہ شهری نے کسی سنی شہری کا جان لی ہو، سنی مسجد میں بندوق اور خود کش جیکٹ پہن کر پوھنچا ہو ،پاکستان میں دیوبندی وہابی تکفیری شہری اپنے ملک کے رہنے والے شیوں کے ساتھ کیا کر رہے ہیں اس پر بولو ، شیعہ بھی ایسا کرینگے ، کرتے جیسی فرضی باتیں نا کرو ، اصل میں ابھی تک شیعہ نفرت اندر سے نکلی نہیں کچھ لوگوں کی، مذہب مار سپرے کے ساتھ ساتھ فرقہ پرستی کا سپرے بھی کرو,,
13 hrs · Like · 1

Salman Ali
یاد رکھو یہ ہزار گنا بہتر ہو تا اگر حکومت پاکستان انصاف کا نام استمعال کرتے ہوۓ شیوں پر ظلم کرے ، مگر چند سنی دیوبندی تکفیری شہری اپنی مرضی کا انصاف کر کے شیعہ نسل کشی کریں ، یہ سنگین معامله ہے اندھیر نگری چوپٹ راج ، اور یہ صرف اس لیے ہو رہا ہے کہ اکثریت کے دلوں میں بچپن سے شیعہ نفرت موجود ہے
13 hrs · Like

Salman Ali
مجھے نہیں معلوم لوگ کیوں اس حقیقت سے آنکھ چراتے ہیں ، آج کی تاریخ میں پوری دنیا میں مسلمانوں کی ناک کٹوانے میں سب سا بڑا رول سنی دیوبندی تکفیری & وہابی فرقے کے رہا ہے ، ان کی وجہ سے لوگ اسلام سے بیزار ہیں ، جس مرضی دہشت گرد کا نام لو وہ سنی دیو وبندی نکلتا ہے جتنی دہشت گرد تنظیمیں ہیں القاعدہ طالبان جند الله دا عش سپاہ صحابہ فلاں فلاں ، اٹسٹرا اٹسٹرا سب سنی تنظیمیں ہیں ڈھونڈھ ڈھانڈ کے ایک حزب الله بچتی ہے جسے شیعہ تنظیم کہا جاتا ہے مگر اس کے کھاتے میں بھی کتنے مسلمانوں کا خون ہے اس کی کتنی گلے کاٹنے کی ویڈیوز ہیں تا حال میں اس سے بے خبر ہوں، جب بھی سنا حزب الله کو اسرائیل کے ساتھ جنگ کے حوالے سے سنا ، باقی جتنی بھی دہشت گرد تنظیمیں ہیں سب اہل سنت وال جماعت کے زیر اثر ہیں، یہ ایک کڑوا سچ ہے کوئی مانے یا نہ مانے فقہ حنفیہ و حمبلیہ و شافیہ میں آخر ایسا کیا ہے جو مسلمان پوری دنیا میں رسوا ہیں ، آخر کیوں دیو بندی وہابی مسلمان زومبی بن جاتا ہے ؟
12 hrs · Like

Ayaz Nizami
جس طرح شیعہ ایک فرقہ ہیں اسی طرح دیوبندی بھی ایک فرقہ ہیں، دونوں کی فرقہ واریت پاکستان میں منظر عام پر ہے، اب بات یہ نہیں ہو رہی کہ کون کا فرقہ مذہب کے نام پر دہشت گردی کر رہا ہے اور کون نہیں، بلکہ اب بات موازنے کی ہے کہ دیوبندیوں کی طرف سے دہشت گردی کی کارروائیاں زیادہ ہو رہی ہیں اور اس کے مقابلے میں شیعوں کی طرف سے کم۔ گویا یہ بھی کسی طور پر دہشت گردی کا دفاع کرنے کا ایک طریقہ ہے۔ ہمارے نزدیک ایک سو لوگ دہشت گردی میں مارے جائیں یا اس کے جواب میں صرف ایک فرد ہی مارا جائے تو یہ دونوں اقدام دہشت گردی کے ہیں، اور مذہب کے نام پر ہمیں اپنے ملک میں یہ گوارا نہیں ہے۔ Salman Ali دیوبندی صرف برصغیر میں پائے جاتے ہیں، برصغیر سے باہر ان کا کوئی وجود نہیں ہے۔ اور جس طرح آپ دوسروں سے بچپن سے ہی شیعہ نفرت کو دل میں پالنے کی شکایت کر رہے ہیں اسی طرح کی آپ کی نفرت دیوبندیوں کے خلاف آپ کے فرقے میں بھی پائی جا رہی ہے، بلکہ موجودہ حالات میں آپ لوگوں کو اس نفرت کو کیش کرانے میں بہت ایڈوانٹیج بھی حاصل ہے، ہم اسی باہمی نفرت کے خاتمے کی بات کرتے ہیں۔ یہاں کسی اور کو کچھ کرنے کی ضرورت نہیں ہے، صرف آپ کو اپنا آپ بدلنے کی ضرورت ہے بس۔
6 hrs · Like

Salman Ali
شیعہ روز قتل ہو کے ( اڈوانٹیج)لے رہے ہیں سبحان الله آپ کی معامله فہمی کی نظامی بھائی، آپ کا مطلب ہے شیعہ ہر روز مریں بھی اور روییں چلائیں بھی نہیں ، اس وقت پوری دنیا میں کسی گروہ کا محض ان کے عقیدے کی بنیاد پر قتل عام کیا جا رہا ہے تو وہ سواے شیعہ کے اور کوئی نہیں ، اور آپ اگر انصاف سے کام لیں تو یہ سمجھنا مشکل نہیں کے شیوں کی طرف سے دہشت گردی کا کوئی ایک واقعہ کم از کم مجھے تو کوئی یاد نہیں پاکستان کی ٦٠ سالہ تاریخ میں ، اکا دکا کوئی فسادی ملا مارا ہو گا زیادہ سے زیادہ اس پر بھی اگر آپ برہم ہیں تو میں آپسے اور باقی تمام دیوبندی پر امن شرفا سے معافی مانگتا ہوں
6 hrs · Like

Salman Ali
مجھے یہ سمجھ نہیں آ رہی کے آپ مولوی عبدل عزیز کی مانند دو بول کھل کر دو ٹوک انداز میں دیوبندی تکفیریوں کی جہالت پر کیوں نہیں کہ رہے، پاکستانی شیعہ مظلوم ہے ، دیو بندی تکفیری ظالم ہیں ، لیکن آپ سو لاشیں اور ایک جاہل ملا کی لاش کا ایک ہی وزن کر رہے ہیں ، کبھی آپ ہزارہ نوجوانوں سے ملے ہیں ، ایک شیعہ کی جان کتنی قیمتی ہے شائد آپ کو علم نہیں، پر آپ شائد شیعہ نوجوان کو بھی دیو بندی تکفیری نوجوان سمجھتے ہیں جسے صرف اتنا کہ کر مرنے پھٹنے پر راضی کیا جا سکتا ہے خوچہ تجھے حور ملے گا ، نہیں بھیا بڑی مشکل سے ہوتا چمن میں دیدہ ور پیدا

31

32

33

34

30

الحاد کا لبادہ اوڑھ کر تکفیری دیوبندیوں کی وکالت کرنے والے فخرِ دو نمبر ملحدینِ جہاں جناب علامہ ایاز نظامی کی خدمت میں ایک حقیر نذرانہِ عقیدت

db

About the author

Shahram Ali

52 Comments

Click here to post a comment