Featured Original Articles Urdu Articles

عید قربان پر دہشتگردوں نے تین مختلف حملوں میں گلگت، پاراچنار اور کوہاٹ سے تعلق رکھنے والے بیس سے زائد شیعہ اور سنی صوفی مسلمان شہید کر دیے

10650049_298800366969811_8916969291826610963_n

kohat
پاکستان میں دیوبندی تکفیری گروہ سپاہ صحابہ نام نہاد اہلسنت والجماعت کے ہاتھوں سنی صوفی اور شیعہ مسلمانوں کا قتل عام اور نسل کشی جاری ہے، گزشتہ چوبیس گھنٹوں میں بسوں اور ویگنوں پر تین مختلف حملوں میں گلگت بلتستان، پاراچنار اور کوہاٹ سے تعلق رکھنے والے بیس سے زائد شیعہ اور سنی صوفی مسلمان شہید ہو گئے ۔ وزیراعظم نواز شریف کی سرپرستی میں کالعدم تکفیری خارجی گروہ سپاہ صحابہ المعروف لشکر جھنگوی کو سنی اور شیعہ مسلمانوں کے خون سے ہولی کھیلنے کی کھلی چھٹی ملی ہوئی ہے، ہہی درندے سوات میں عوامی نیشنل پارٹی کے پشتون قوم پرست رہنماؤں کو شہید کر رہے ہیں جبکہ کراچی اور پشاور میں معصوم سنی بریلوی اور شیعہ کے خون سے ہولی بھی یہی کھیل رہے ہیں – پاکستانی میڈیا اور بلاگرز جن میں دیوبندی وہابی متعصب اور جعلی لبرلز کا راج ہے شیعہ اور سنی صوفی نسل کشی اور دیوبندی دہشت گردوں کی شناخت پر پردہ ڈال رہے ہیں

ایسا لگتا ہے کہ صوبہ سندھ کی طرح ، صوبہ خیبر پختنونخواہ کی حکومت بھی سپاہ صحابہ کے ہاتھوں شیعہ اور سنی صوفی نسل کشی روکنے میں ناکام ہو چکی ہے

ہم پاکستان کو فوج کے چیف راحیل شریف اور آئی ایس آئی کے چیف رضوان اختر سے اپیل کرتے ہیں کہ تکفیری خوارج کے خلاف آپریشن ضرب عضب کا دائرہ کراچی، پشاور، راولپنڈی، کوہاٹ، ہنگو اور گلگت تک وسیع کریں اور طالبان کے شہری روپ اور معاون سپاہ صحابہ کے دہشت گردوں کو چن چن کر جہنم رسید کریں