Featured Original Articles

لاٹھی آپ کی ہے، بھینس بھی تو اپ کی ہوگی نا

میری سہلی جیم کی کال آئی. کہنے لگی کہ سیما کے شوہر نے اپنی پسند سے دوسری شادی کرلی ہے اور مجھے بہت دکھ ہے. میں نے کہا: جیم پیاری، تم جانتی تو ہو کہ سیما کی شوہر سے کبھی نہیں بنی. اس کو شادی سے پہلے بھی کزن پسسند تھا اور شادی کے بعد بھی وہی پسند ہے. شوہر کو لفٹ نہیں کرآتی. اگر اب شوہر کو کوئی پسند آگیا تو افسوس کیسا. سیما تو ابھی بھی گھر میں بیٹھی رہے گی اور سونا اور کپڑے بیچارے شوہر کے پیسوں سے بنا لے گی. اورچھپ کر کزن سے بھی ملے گی

Shazia Nawaz

SHAZIA NAWAZ

جیم نے بڑی زبردست بات کی. کہنے لگی، قانون مختلف کیوں؟ اگر سیما کا شوہر دوسری بیوی لا سکتا ہے، تو سیما کزن سے چھپ چھپ کر کیوں ملے؟ وہ کیوں نہ لاے اس کو گھر میں دوسرا شوہر بنا کر؟

بات تو دل کو لگتی ہے. قانون تو سب کے لئے ایک ہو
پیچھلے دنوں کچھ من چلوں نے مطالبہ کیا کہ شوہر پر سے پہلی بیوی سے اجازت لے کردوسری شادی کرنے کی شرط ہٹا دی جاے . مرد جتنی بیویاں لے کر آ جاے اس کی مرضی. پہلی بیوی سے اجازت کی کیا تک ہے؟

جو لوگ مرد کی دو شادیوں کے حامی ہیں، وہ لوگ دو  دلایل دینے کی کوشش کرتے ہیں. پہلی بات یہ کہتے ہیں کہ مرد کی جنسی ضرورت عورت سے زیادہ ہے اور وہ زیادہ عورتیں نبٹا سکتا ہے

یہ بات ایک تکلیف دہ مذاق سے کم نہین . اگر لوگ اپنے اپ کو اور د وسروں کو بیوقوف بنا نا چاہیں تو کوئی کیا کر سکتا ہے. مگر سچائی یہ ہے، کہ جنسی ضرورت مرد اور عورت کی ایک جیسی ہے. حضرت حفصہ کا بیان تو یہ ہے کہ عورت کی ضرورت مرد سے ٨٠ گنا زیادہ ہے. مگر اعداد و شمار اور ریسرچ سے یہ بات ثابت نہیں ہوتی. مرد اور عورت کی ایک جیسی ضرورتیں ہیں. مگر عورت کے لئے ایک سےزیادہ  مرد رکھنا آسان ہے ، کیوں عورت کو مردانہ کمزوری نہیں ہوتی. ٥٠ فیصد مرد، ٥٠ کی عمر کے بعد مردانہ کمزوری کا شکار ہوتے ہیں اور ازدواجی ضرورت پوری کرنے کے قابل نہیں رہتے. اگر چار مرد کہیں بیٹھ کر بات کر رہے ہیں، تو جان لیں کہ ان میں سے دو فالتو کی بڑکیں مآر رہے ہیں. یہ تو اعداو شمار کہتے ہیں

اس کے بر عکس عورت کسی بھی عمر کی ہو، اسے کسی تیاری کی ضرورت نہیں ہے ازدواجی ذمہ داری نبھانے کے لئے

یہ بھی سفید جھوٹ ہے کہ دنیا میں عورتوں کی تعداد مردون سے زیادہ ہے. لوگوں نے اپنے اپ کو اور دوسروں کو بیوقوف بنانے کے لئے یہ جھوٹ پھیلا رکھے ہیں. اصل میں مرد اور عورتوں کی تعداد دنیا میں تقریبا ایک جتنی ہے

دوسر١ تکیلف دہ مذاق جو لوگوں نے پھیلایا ہے، وہ یہ ہے کہ مردوں کے اندر بے رہ راوی کا شکار ہونے کے امکانات زیادہ ہیں، اور عورت کی نیچر میں وفا ہے. اب یہ بات تولگتا ہے عورتوں نے مشہور کی ہے، مردوں کو بیوقوف بنانے کے لئے. کیوں کہ ایک بے را ہ روا   مرد سے بہتر کون جان سکتا ہے کہ عورتوں کتنی بے رہ راوی کا شکار ہوتی ہیں

امریکا اور یورپ میں جب عورتوں نے جنسی آزادی کا مطالبہ کیا اور آزادی حاصل کر لی، تو سب نے دیکھا کہ عورتیں اس معاملے میں کسی سے کم نہیں اور بلکل مردوں کی ترھا نکلی
جیسے مردوں کو معافی ہے، پھر عورتوں کو بھی ہو. جیسے آپ ویسے ہم.   جنید جمشید بھائی نے تو صاف کہا سب کے سامنے کہ عورت کمزور ہے، بہک سکتی ہے اور اس وجہ سے ضرروی ہے کہ اس کو ڈرائیونگ نہ سیکھائی جائے اور اسی لئے جنید بھای نے بیوی کو کبھی ڈرائیو نہیں کرنے دیا

اب یہ ایک بھیانک مزاق ہے. اپنی بے رہ راوی کی حمایت میں قانون بنا لو اور عورت کو بے رہ راوی سے بچانے کے لئے گھر میں بند کر دو. جنید جمشید بھائی کر سکتے ہیں . ان کے پاس لاٹھی ہے. اب اگر لاٹھی ان کی ہے، تو بھینس بھی ان کی ہی ہوگی نآ

About the author

Shazia Nawaz

4 Comments

Click here to post a comment
  • Dear miss shazia Nawaz!

    Hope you keeping well out there, the reason I initiate contact and decided to comment on this material you up loaded, first being Muslim we can’t declare other Muslim Good or bad, secondly you can’t create perception of entire faith on single individual. ( I know all this) Al-hamdolila

    Am not here to debate or cross examine you, long story short no matter what you type or publish or upload about our women it’s useless, coz our women can’t be compared with western women ,
    I can clearly sense that you are provoking our traditional or so called conservative women for committing sin’s , there is certain limits and boundaries set for islamic women which is set by Allah ( mentioned several time in Quran and hadith’s) .

    The way you pictured your whole story seem’s like you will indirectly involved with the sins which women will commit in name of equal rights and independence.

    I know you may be thinking maybe I look down on women, lol, which is not true but being liberal is not bad unless you have your standards sets, you seems like victim of western heat as well.. any way I would like to mention Iqbal here :
    Suraj hamay har shaam ya daras deta hai
    Musharik key taraf jaoo gay to doob jaoo gay

    Keep well lady do some creative stuff rather then crying in name of equality and independent life style, do not misguide other gals, our society is
    already westerner stop fueling more in it.
    Salaam nd do not take it to lungs
    Astala Vista
    Cio
    Salaam

  • Hi Admin LUBPAK
    I Cannot understand why you are allow to post such Type of Article against the Basic Laws of Islam. It is Not Good for your Site as Your Site is an Important Platform against Global Terrorism.
    Hope you can understand my Point.

  • I don’t wanna sound rude but I think it’s ur personal experience that u r describing in words . My husband always satisfy me in bed n we are married for 15 years and with every coming day I feel he is getting even better love maker so I would never need any other man . So I think that as ur husband is incapable of intimacy that’s y u r writing such ridiculous article . Btw madam how many sexual partners u n ur daughter have ? N don’t try to promote ur personal experience on this forum