Original Articles Urdu Articles

جنگ گروپ اور دیوبندی تکفیریوں کی طرف سے جان سے مارنے کی دھمکیاں ملی ہیں – صاحبزادہ حامد رضا کا انٹرویو

Screen Shot 2014-05-24 at 7.03.26 PM

Screen Shot 2014-05-24 at 7.03.42 PM

http://jang.com.pk/jang/may2014-daily/24-05-2014/u19553.htm

اہل سنت بریلوی کی تنظیموں کی جانب سے گستاخان رسول و اہلبیت علیھم السلام، تکفیری دیوبندی دہشت گردوں کی پشت پناہی پر جیو جنگ گروپ  کے خلاف ملک گیر احتجاج کیا جارہا ہے اور اس حوالے سے سنّی اتحاد کونسل سب سے زیادہ سرگرم نظر آرہی ہے جس پر جیو جنگ گروپ کی جانب سے ایسا لگتا ہے کہ سنّی رہنماؤں کے خلاف بالعموم اور سنّی اتحاد کونسل کے چئیرمین صاحبزادہ حامد رضا کے خلاف بالخصوص کردار کشی کی مہم شروع کردی ہے

ادارہ تعمیر پاکستان پرامن طریقے سے احتجاج کرنے والے سنّی علماء کی جیو-جنگ کروپ کی جانب سے کردار کشی کئے جانے اور ان کا میڈیا ٹرائل کئے جانے کی مذمت کرتا ہے

ادارہ تعمیر پاکستان نے اس حوالے سے صاحبزادہ حامد رضا سے رابطہ کیا اور مذکورہ صورت حال پر ان سے خصوصی گفتگو کی جو قارئین کی نذر ہے

ادارہ تعمیر پاکستان:جناب یہ بتائیے کہ جیونیوز پر یہ خبر نشر ہوئی کہ سنّی اتحاد کونسل پاکستان کے چئیرمین حامد رضا سے عامر لیاقت حسین نے رابطہ کیا اور ان سے جنگ-جیو کے دفتر کراچی کے سامنے سنّی اتحاد کونسل کا دھرنا منسوخ کرنے کی درخواست کی اور انھوں نے یہ درخواست قبول کرلی اور دھرنا ختم کردیا گیا ،جبکہ جنگ لاہور اورملتان ایڈیشنوں میں بھی یہی خبر شایع کی گئی جبکہ یہ بھی بیان آپ سے منسوب کیا گیا کہ آپ نے جنگ-جیو پر توھین اہل بیت کے الزام کو دو میڈیا گروپوں کے درمیان لڑائی کا نتیجہ قرار دیا تو اس میں حقیقت کیا ہے؟

حامد رضا:جیو نیوز نے ڈاکٹر عامر لیاقت حسین کے ساتھ میرے رابطے کی جو خبر نشر کی وہ جھوٹ ہے اور ان سے میرا کوئی رابطہ نہیں ہوا اور نہ ہی سنّی اتحاد کونسل کا کراچی میں دھرنا ختم نہیں ہوا بلکہ معراج کی تقریبات کی وجہ سے یہ دھرنا ملتوی ہوا اور مجلس عاملہ کے اجلاس کے بعد ہم ملک گیر احتجاج دوبارہ سے شروع کریں گے
اور جیو -جنگ گھٹیا اور زرد صحافت کررہا ہے اور میں نے ایسا کوئی بیان نہیں دیا کہ توھین اہل بیت کا جیو پر الزام دو میڈیا گروپوں کی باہمی لڑائی کا شاخسانہ ہے بلکہ جیو ہماری نظر میں واقعی اہل بیت اطہار کی توھین اور بے ادبی کا مرتکب ہوا ہے اور ہم اس کے خلاف پیمرا کو نوٹس لینے ،حکومت کی جیو نوازی کے خلاف احتجاج کررہے ہیں جبکہ ہم نے مرتکبین کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع کیا ہوا ہے تو ہم کیسے اسے میڈیا گروپ کا شاخسانہ قرار دے سکتے ہیں

جنگ راولپنڈی اور جنگ کراچی نے میرے بیان کو بالکل ٹھیک شایع کیا ہے لیکن جیو نیوز اور اس کے ملتان و لاہور ایڈیشن میرے بارے میں من گھڑت خبریں نشر اور شایع کررہے ہیں

جنگ -جیو گروپ بوکھلاہٹ کا شکار ہے اور عذر گناہ بدتر از گناہ کی حالت کا شکار ہوچکا ہے ،میں اس کی پرزور مذمت کرتا ہوں

ادارہ تعمیر پاکستان:جیو-جنگ کی جانب سے یہ الزام بھی سامنے آیا ہے کہ سنّی اتحاد کونسل کی جانب سے ان کے کراچی آفس سمیت مختلف جگہوں پر دھمکیاں موصول ہورہی ہیں اور آپ کی تنظیم پر شدت پسندی کے الزام بھی لگ رہے ہیں تو اس میں کہاں تک صداقت ہے؟
حامد رضا:یہ سب الزام غلط ہیں اور گھٹیا ہیں اور جیو نیوز گروپ کے مالکان کی یہ عادت بن گئی ہے کہ وہ جو اس کی بات نہ مانے اور اس کے موقف کو ٹھیک نہ کہے وہ اس کے خلاف پگڑی اچھال مہم شروع کردیتا ہے
حقیقت اس کے الٹ ہے جیو گروپ نے ہماری تنظیم کے مرکزی رہنماء طارق محبوب کو پہلے احتجاج کو بند کرنے کے بدلے دو کروڑ روپے کی پیشکش کی اور پھر جب وہ نہیں مانے تو ان کو ان جان نمبروں سے دھمکی آمیز کال ملنی شروع ہوگئیں

مجھے بھی جیو اور سپاہ صحابہ پاکستان جو سپاہ یزید ہے کی جانب سے جان سے مارنے کی دھمکیاں مل رہی ہیں
جہاں تک بات ہم پر شدت پسندی کے الزام کی ہے تو ہم مہذب شہری ہیں ،قانون کی پاسداری پر یقین رکھتے ہیں اور آئین پاکستان کی پاسداری کرنے والے لوگ ہیں

جیو-جنگ نے پاکستان بھر کے مسلمانوں کے جذبات مجروح کئے ہیں اور ان کو اپنے کئے پر کوئی پیشمانی نہیں ہے یہ ایک طرف معافی کی بات کرتے ہیں تو دوسری طرف کردار کشی کی مہم چلاتے ہیں
احتجاج اور پرامن دھرنے ہمارا جمہوری حق ہے جسے ہم استعمال کررہے ہیں اور آئین پاکستان ،پیمرا کے قوانین کے تحت کاروائی کا مطالبہ کررہے ہیں اس میں شدت پسندی کی بات کہاں سے آجاتی ہے

جیو-جنگ گروپ کی منافقت اور دوھرا پن یہ ہے کہ دیوبندی تکفیری انتہا پسند تنظیموں کو ھیرو بناکر دکھاتا رہا ہے اور سپاہ صحابہ پاکستان جو جعلی طور پر اہل سنت والجماعت بنی ہوئی ہے کی امیج بلڈنگ کے لیے اپنے کندھے پیش کرتا رہا ہے اور آج بھی اگر پاکستان میں انتہا پسندی اور دھشت گردی کو کوئی پاکستانی شہروں میں فروغ دے رہا ہے تو وہ دیوبندی تکفیری نیٹ ورک ہےیہ سب خبیث الفطرت لوگ ہیں جن کو جیو ھیرو بناکر دکھاتا رہا ہے
ہم نے آج تک قانون کو ہاتھ میں لیا نہ ہی لیں گے لیکن جوگروہ مسلمانوں کے جذبات اور عقائد کو مجروح کرے گا اس کو قانون کے کہٹرے تک اور قرار واقعی سزا دلانے تک ہم چین سے نہیں بیٹھیں گے

نوٹ:سنّی اتحاد کونسل کے مرکزی چغیرمین صاحبزادہ حامد رضا کی جانب سے ان تصریحات سے یہ واضح ہوگیا کہ حامد رضا سے جھوٹے اور من گھڑت بیانات چلائے جاتے رہے ہیں اور ان بیانات کو بنیاد بناکر سپاہ  یزید نے سوشل میڈیا پر جھوٹا پروپیگنڈا شروع کیا ہوا ہے اور صاحبزادہ حامد رضا کی دیوبندی-وہابی تکفیری لابی کردار کشی کررہی ہے اور اہل سنت بریلوی کو بدنام کرنے کی کوششیں کی جارہی ہیں ،سپاہ یزید صاحبزادہ حامد رضا سمیت اہل سنت بریلوی سے اس لیے بھی ناراض ہے کہ ان علماء نے پاکستان میں شیعہ-سنّی خانہ جنگی کرانے کی سپاہ یزید کی سازش ناکام بنادی اور اس کا بڑا کریڈٹ صاحبزادہ حامد رضا اور ان کے والد صاحبزادہ فضل کرم رحمۃ اللہ علیہ کو جاتا ہے ،صاحبزادہ حامد رضا اور علمائے اہل سنت بریلوی کی کردار کشی کس طرح سے سوشل میڈیا پر جاری ہے اس کا ایک نمونہ یہ تصویر ہے

10270346_501127000016460_1178874205020315972_n

10275986_501260843336409_524236000354655335_n

سپاہ یزید دیوبندی کی جانب سے یہ کردار کشی ظاہر کرتی ہے کہ سنّی اتحاد کونسل سے کس قدر تکلیف سپاہ یزید کو ہے اور اس پروپیگنڈا میں نواز شریف اینڈ کمپنی بھی شامل ہوگی جس کے کالے کرتوت صاحبزادہ حامد رضا اور ان کے والد نے بے نقاب کئے اور وہ پہلے آدمی تھے جنھوں نے نواز شریف کو دیوبندی دھشت گردوں اور انتہا پسندوں کا سیاسی چہرہ کہا اور اس کے خلاف اعلانیہ جدوجہد شروع کی اب صاحبزادہ حامد رضا بھی اسی راستے پر گامزن ہیں اس لیے ان کو جان سے مارنے کی دھمکیاں بھی مل رہی ہیں اور ان پر ڈالر لینے کے الزام بھی لگائے جارہے ہیں جبکہ دیوبندی تکفیری لابی کے سرغنہ اعظم جامعہ بنوریہ العالمیہ کے مفتی نعیم اربوں ڈکار جانے والے مفتی عبیداللہ کی سرپرستی کرتے ہیں اور پانی چوری کرنے والے مافیا کا ساتھ دیتے ہیں ثبوت حاضر ہیں

مفتی نعیم اور فراڈ

10411873_447353275400693_1545317194615483242_n

امت نیوز جامعہ بنوریہ اور پانی چوری

دیوبندی تکفیری دھشت گرد بے شرمی سے جس خباثت کا مظاہرہ سنّی اتحاد کونسل کے چئیرمین اور دیگر علمائے اہل سنت بریلوی کے بارے میں کررہے ہیں اس کے بعد ہمارا فرض بنتا ہے کہ ہم ان کی خباثت کا پردہ چاک کریں زرا یہ خباثتیں دیوبندی تکفیریوں کی ملاحظہ کریں

10325351_10202404416651545_311382050538997953_n

Jihad Nikah