Featured Original Articles Urdu Articles

شیعہ حضرات میں فوج کے پالتو لوگ دیوبندی دہشتگردی کو وہابی یا سلفی مسلمانوں کے نام لگاتے ہیں – از مسلم یونٹی

mu

tak

شیعہ حضرات میں فوج کے پالتو لوگ دہشتگردی کو وہابی یا سلفی مسلمانوں کے نام لگاتے ہیں جبکہ دہشتگرد صرف اور صرف دیوبندی مسلک سے تعلق رکھتے ہیں_ وہابی لوگ غیر مقلد ہیں اور دیوبندی لوگ فقہ حنیفہ سے تعلق رکھتے ہیں

دیوبندی علماء نے سو سال سے بھی زیادہ عرصہ ہوا ایک کتاب “المہند علی المفند” لکھ کر واضح کیا تھا کہ دیوبندیت اور وہابیت میں بہت فرق ہے_ یہ مختصر کتاب مکتب دیوبند کے عقائد کی نمائندہ کتاب سمجھی جاتی ہے، ملک بھر میں آج بھی پڑھی جاتی ہے_ خواہشمند حضرات سے گزارش ہے کہ اس کتاب کو پڑھنے کی زحمت کریں

https://archive.org/details/Al-Muhannad-Al-Al-Mufannad-Arabic-Urdu-Aqaid-ahle-Sunnat-wal-jamaat-Ulama-Deoban
جب افغانستان میں آئ ایس آئ کی طاقت کی بدولت دیوبندی طالبان کو تغلب نصیب ہوا تو انہوں نے وہابی اور جماعت اسلامی کے لوگوں کو بھی شیعہ اور بریلوی حضرات کی طرح مارا

دیوبندی بھائیوں نے وہابی سلفی مسلمانوں کے خلاف بہت سے پیجز بنا رکھے ہیں، جس پوسٹ میں “غیر مقلد” یا “اہل حدیث” پر لعنت کی جا رہی ہو اس سے مراد وہابی ہیں

پاکستان میں ہونے والی دہشتگردی کو مفت میں وہابیوں کے نام لگا دیا جاتا ہے جبکہ یہ دہشتگردی فوج کی سرپرستی میں چلنے والے دیوبندی لشکر کر رہے ہیں

دیوبندی دہشتگردی کے ذمہ دار سلفی یا وہابی مسلمان نہیں بلکہ وہ دیوبندی فرقہ پرست، سعودی سلفی ریا ل خور مولوی ہیں جن کی سرپرستی پاکستانی فوج کرتی ہے اور جو طالبان اور سپاہ صحابہ کے دیوبندی دہشت گردوں کی دہشت گردی کی حمایت کرتے ہیں یا خاموش رہتے ہیں ، فوج سرپرست ہے اور دیوبندیوں میں تکفیری لوگ قاتل

یہی وجہ ہے کہ سپاہ صحابہ اور طالبان کے تمام تر حامی فیس بک پیجز کے نام علما دیوبند یا مسلک دیوبند کے نام سے منسوب ہیں، آپ کو سپاہ صحابہ یا لشکر جھنگوی کا کوئی فیس بک صفحہ علما اہل حدیث یا علما سلف کے نام سے منسوب نظر نہیں آئے گا_ بلکہ سپاہ صحابہ اور طالبان وغیرہ کی ویب سائٹس پر شیعہ اور سنی بریلوی پر تنقید کے ساتھ ساتھ سلفی یا وہابی مسلک اور علما پر بھی تنقید نظر آتی ہے اور بہت سے دیوبندی علماء نے سلفی حضرات کے خلاف کتب لکھی ہیں

یقیناً سعودی عرب کے سلفی حکمران پاکستان میں دیوبندی دہشت گردوں کی مالی اور سیاسی امداد کرتے ہیں اور اس مدد کا انکار نہیں کیا جا سکتا نہ ہی اس بات سے کہ شام اور عراق میں ہونے والی دہشتگردی کے پیچھے وہابی اقلیت کا ہاتھ ہے، لیکن یہ بھی واضح رہے کہ پاکستان میں جو اہلحدیث یا وہابی سلفی جہادی گروہ موجود ہیں،جیسا کہجماعت الدعوه یا لشکر طیبہ ہے، اس گروہ کے لوگ سلفی یا وہابی
ہیں لیکن پاکستان میں دہشت گردی کی کاروائیوں بشمول شیعہ نسل کشی میں اس گروہ کا کوئی نمایاں کردار نہیں

امر واقعہ یہ ہے کہ جب دیوبندی طالبان نے افغانستان پر قبضہ کیا تو صوبہ کنڑ میں انہوں نے سلفی وہابیوں کی شریعت نافذ کرنے کی کوشش کو سختی سے کچلا اور سینکڑوں وہابیوں سلفیوں کو قتل کیا
ہم جماعت الدعوہ کے سلفی وہابی مسلح گروہوں کے حامی نہیں لیکن سپاہ صحابہ کے دیوبندی دہشت گردوں کے کے ہاتھوں سنی بریلوی، شیعہ اور غیر مسلم پاکستانیوں کے قتل کا الزام سلفی وہابیوں پر لگانا نہ صرف زیادتی ہے بلکہ قاتل کو صاف بچانے کے مترادف ہے جب تک رپورٹ میں اصلی قتل کا نام اور شناخت موجود نہیں ہوگی تو مقتول کے ورثا کو انصاف کیسے ملے گا؟

یہی وجہ ہے کہ آج اکوڑہ خٹک میں  سمیع الحق کے مدرسہ حقانیہ سے لے کر راولپنڈی کے تعلیم القران مدرسے تک اور اسلام آباد کی لال مسجد سے لے کر کراچی میں بنوری مدرسے اور مسجد صدیق اکبر تک، تمام دیوبندی مدارس اور مولانا حضرات طالبان کے اعلانیہ حامی اور سپاہ صحابہ کے جرائم پر خاموش ہیں
یقینی طور پر دیوبندی مسلک کے کچھ نظریات خاص طور پر اولیا الله کے مزاروں، میلاد النبی اور عاشورہ محرم کے بارے میں ان کے اور سلفی وہابیوں کے پر تشدد خیالات میں زیادہ فرق نہیں لیکن اس مماثلت کی بنیاد پر دونوں کو ایک ہی مسلک یا گروہ قرار نہیں دیا جا سکتا_ دیوبندیوں کا مماتی گروہ (جیسا کہ پنج پیری) عقائد میں سلفیوں سے زیادہ مماثلت رکھتا ہے لیکن اس کے باوجود یہ لوگ اصلاً حنفی دیوبندی ہیں، وہابی سلفی نہیں

آج کل کچھ بد دیانت تجزیہ کار اور اخبار نویس ثابت کرنا چاہ رہے ہیں کہ لشکر جھنگوی برا ہے جبکہ سپاہ صحابہ بہتر ہے، پاکستانی طالبان برے ہیں جبکہ افغان طالبان بہتر ہیں، القاعد ہ ایک بری تنظیم ہے لیکن طالبان بہتر ہیں، وہابی سلفی برے ہیں لیکن دیوبندی بہتر ہیں، دیوبندی مماتی برے ہیں لیکن دیوبندی حیاتی بہتر ہیں وغیرہ، اس تمام بحث کا ایک ہی مقصد ہے کہ کسی طرح سے عوام، میڈیا اور انسانی حقوق کی تنظیموں کی توجہ دیوبندی دہشت گردوں کی اصلی شناخت سے ہٹا دی جائے تاکہ وہ بے روک ٹوک دہشت گردی کی کاروائیاں جاری رکھ سکیں

ان حالات میں جو شخص یا گروہ سپاہ صحابہ اور طالبان کی دیوبندی شناخت کو چھپانے کی کوشش کرتا ہے اس کا شمار پاکستانی عوام کے دوستوں میں نہیں کیا جا سکتا

source: https://www.facebook.com/MuslimUnityPakistan
Post 2

u

About the author

SK

3 Comments

Click here to post a comment
  • A research article on differences and similarities between Deobandis and Salafis/Wahhabis – See more at: https://lubp.net/archives/280211#sthash.aI24fmvD.dpuf

    شیعہ حضرات میں فوج کے پالتو لوگ دیوبندی دہشتگردی کو وہابی یا سلفی مسلمانوں کے نام لگاتے ہیں – از مسلم یونٹی – See more at: https://lubp.net/archives/305763#sthash.4QkKPlko.dpuf

    طالبان اور سپاہ صحابہ کے دیوبندی دہشت گردوں کے جرائم کاالزام سلفی وہابی پر لگانے کا کیا مقصد ہے – See more at: https://lubp.net/archives/304463#sthash.p01TrGwQ.dpuf

  • کوفے کے بارے ميں شناسائي ايک اہم مسئلہ ہے ۔ ہمارے خيال ميں کوفہ کا مطالعہ اور تاريخ کے مختلف ادوار ميں اہلِ کوفہ کي نفسیات کا جائزہ انتہائي دلچسپ بحث ہوگي۔جو لوگ اس کام کي لياقت رکھتے ہيں ‘ ماہرين ‘ معاشرہ شناس اورنفسيات داں ‘اُنہيں چاہئے کہ وہ بيٹھيں اورکوفہ کے بارے ميں گفتگو کريں ‘ سوچ بچار کريں ‘ بحث کريں اور ديکھيں کہ يہ کيسا عجيب مقام ہے جہاںايک موقع پرانتہائي حيرت انگيز عظيم انساني کمالات کا مظاہرہ ہوتا ہے اوردوسرے موقع پر اس قدر بے ضميري ‘کمينگي ‘ سستي ‘ کا ہلي اور ذلت کا ۔ايسا کيوں ہے ؟ — خامنہ ای