Featured Original Articles Urdu Articles

کراچی- دیوبندی دھشت گرد 470 مربع میل پر کنٹرول کرچکے ہیں- تہلکہ خیز رپورٹ

دیوبندی تکفیری خارجی دھشت گردوں کی پاکستان کی اقتصادی شہ رگ سمجھے جانے والے شہر کراچی پر گرفت مضبوط ہوگئی ہے

ایک انگریزی غیرملکی اخبار نے اپنی خصوصی تحقیقی رپورٹ میں انکشاف کیا ہے کہ کراچی میں دھشت گردوں اور کریمنلز کے خلاف پانچ ماہ سے جاری آپریشن میں ابھی تک دیوبندی دھشت گرد تنظیموں سے تعلق رکھنے والے صرف 63 دھشت گردوں کو گرفتار کیا جاسکا ہے جبکہ سندھ حکومت کے ترجمان شرجیل میمن کے مطابق پولیس ورینجرز نے اب تک دس ہزار سے زیادہ چھاپے مارے اور ان میں 13 ہزار لوگوں کو گرفتار کیا گیا

گویا 13 ہزار گرفتار لوگوں میں دیوبندی تکفیری خارجی دھشت گرد صرف 63 پکڑے گئے

جبکہ ایک رپورٹ کے مطابق دیوبندی دھشت گرد تنظیم تحریک طالبان پاکستان/کالعدم سپاہ صحابہ پاکستان وغیرہ کراچی کے چار سو ستر مربع میل رقبے پر کنٹرول کررہی ہے اور اس علاقے کی کل آبادی 25 لاکھ بنتی ہے اور اس میں تقریبا 33 یونین کونسلز آتی ہیں جبکہ کراچی کی کل 178 یونین کونسلز ہیں اور دیوبندی دھشت گردوں کے کنٹرول میں زیادہ تر وہ علاقے ہیں جہاں پشتون آبادی زیادہ ہے اور یہ علاقے بلدیہ ٹاؤن،سندھ انڈسٹریل ٹریڈنگ اسٹیٹ،ویسٹ کراچی اور نارتھ کراچی کو انسرکل کئے ہوئے ہیں

دیوبندی دھشت گردوں کو نہ صرف پشتون آبادی سے ریکروٹمنٹ مل رہی ہے بلکہ مہاجر ،سندھی ،بلوچ اور پنجابی گروہوں کے اندر سے ریکروٹمنٹ مل رہی ہے

کراچی میں دیوبندی دھشت گردوں کے پولیس،سی آئی ڈی،رینجرز اور انٹیلی جنس افسران پر حملوں میں اس سال بہت اضافہ دیکھنے کو ملا ہے جنوری کے مہینے میں پولیس کے 27 افسران کو نشانہ بنایا گیا جبکہ گزشتہ سال 168 پولیس افسران کو ہلاک کیا گیا تھا

دیوبندی دھشت گردوں نے کراچی میں جہاں اپنے خلاف کاروائی کرنے والے سیکورٹی افسران کو نشانہ بنانا شروع کیا ہوا ہے وہیں ان کے نشانے پر شیعہ،بریلوی کمیونٹی کی مساجد،امام بارگاہیں،درگآہیں اور خانقاہیں ہیں اور ان کو سرعام مارنے کا وتیرہ بھی اختیار کیا گیا ہے

دیوبندی دھشت گردوں کا بڑھتا ہوا اثر و رسوخ اور کنٹرول کراچی کے اندر دیوبندی دھشت گردوں کے لیے معاشی لائف لائن بھی ثابت ہورہا ہے

کراچی سے بہت بھاری رقم جوکہ تاوان،ڈکیتی ،چوری،بھتہ وغیرہ سے حاصہل ہوتی ہے طالبان کی لیڈر شپ کو جارہی ہے اور یہ عمل بغیر کسی روک ٹوک کے ہورہا ہے

ایک پولیس افسر نے بتایا کہ طالبان کی لیڈرشپ جو کراچی میں سرگرم ہے اس پر کراچی آپریشن کرنے والوں نے ہاتھ ہی نہیں ڈالا ہے اور کراچی میں دیوبندی دھشت گردوں کی پشتیبانی کرنے والے آزاد گھوم رہے ہیں

کراچی سے باہر دیوبندی دھشت گردی حب چوکی ،کراچی ویسٹ ،جامشورو اور نارتھ ایسٹ کراچی تک پھیلتی اور علاقوں کو کنٹرول کرتی نظر آرہی ہے

کراچی میں دیوبندی دھشت گردی کا پھیلاؤ جس رفتار اور جس پیمانے پر ہورہا ہے اس کا تذکرہ پاکستان کے مین سٹریم میڈیا سے غائب ہے

اس کی ایک وجہ ایکسپریس چینل کی وین پر ہونے والا حملہ بھی ہے لیکن ايسا لگتا ہے کہ صحافی اپنی آزادی رائے پر اپنی جان کو ترجیح دے رہے ہیں 

About the author

Muhammad Bin Abi Bakar

11 Comments

Click here to post a comment