Featured Original Articles Urdu Articles

پشاور امام بارگاہ پر خود کش حملے کی ایف آئی آر سپاہ صحابہ ، طالبان اور عمران خان کے خلاف درج کی جائے – لواحقین کا مطالبہ

1798792_681490791894084_1163326958_n

1888513_633526590017316_812609163_n

400631_225520460964469_485132268_n

1601586_633493206687321_220219002_n

1620517_633395676697074_2003263310_n

1621805_586197634807320_1325806216_n

پشاور دھماکہ بے گناہ قتل و زخمی ہونے والے بچوں و خواتین سمیت درجنوں افراد کے قتل کی ایف آئی آر طالبان خان پی ٹی آئی اور لدھیانوی سپاہ صحابہ لشکر جھنگوی اور ٹی ٹی پی کے فضل اللہ پر مشترکہ درج کی جائے۔ پاراچنار کے عوامی و سماجی حلقوں اور شہدا کے لواحقین کا مطالبہ۔

پشاور قصہ خوانی بازار میں ٹارگٹ بم دھماکے کے لواحقین اور پاراچنار کے عوامی و سماجی حلقوں نے مطالبہ کیا ہے کہ اس دھماکے کی ایف آئی آر اور پشاور دھماکے میں پاراچنار کے بچوں و خواتین سمیت درجنوں شہدا و زخمیوں کی ایف آئی آر طالبان خان پی ٹی آئی،ٹی ٹی پی فضل اللہ اور لشکر جنگلی و سپاہ صحابہ کے دہشت گرد لدھیانوی پر مشترکہ درج کی جائے۔۔۔کیونکہ کوچہ رسالدار پشاور میں واقع اسی مقام پر پاراچنار کے لوگوں کے خلاف طالبان دہشت گردوں کی یہ تیسری کاراوئی ہے۔

علاوہ ازیں انہی طالبان سپاہ صحابہ و لشکر جھنگوی نے گزشتہ چند سالوں میں پاراچنار اور پشاور میں پاراچنار کے مظلوم عوام بشمول بچوں اور عورتوں کو ٹارگٹ کرکے اور پاراچنار پر طالبان لشکر کشیاں کرکے 1700 سے زائد افراد شہید اور 5000 سے زائد زخمی و معزور کر دئیے ہیں ۔اسلئے پاراچنار کے لوگ دشمن شناس ہیں پی ٹی آئی بزدل خان کی طرح کنفیوز نہیں۔ طالبان خان پر ایف آئی آر اسلئے کہ پشاور میں پی ٹی آئی کی حکومت ہے اور طالبان خان دہشت گرد طالبان کے خلاف کاروائی کی بجائے ان کا ساتھ دے رہے ہیں۔

پشاور میں پی ٹی آئی حکومت جو دراصل ٹی ٹی پی کی حکومت بن چکی ہے کی طالبان نوازی اور عوام کے جان و مال کے حوالے سے غیر سنجیدگی کا پتہ اس سے بخوبی لگایا جا سکتا ہے کہ چند ماہ پہلے پی ٹی آئی حکومت کے آغاز میں دہشت گردوں نے جی ٹی روڈ پشاور میں پاراچنار کے باشندوں کو نشانہ بنایا جسمیں معصوم بچوں سمیت درجنوں افراد شہید ہوئے۔

اس بڑے واقعے کے مجرموں اور طالبان دہشت گردوں کی مزمت کرنے کی بجائے پی ٹی آئی کے بے شرم وزیر شوکت یوسفزئی نے شہدا و زخمیوں کے لواحقین کو اس وقت شدید مایوس کیا کہ طالبان نواز طالبان خان کی ایما پر شوکت یوسفزئی نے اس وقت بے شرمی کی انتہا کرکے یہ جملہ کہا کہ ”دھماکہ ہی ہوا ہے کوئی قیامت تو نہیں آئی” ایسے بے حس حکمرانوں طالبان خان اور پی ٹی آئی سے عوام کی جان و مال کا تحفظ محال ہے اسلئے ان پر ایف آئی آر درج کی جائے۔